رمضان میں تہجد کے وقت ہرحاجت کے لیے عظیم ترین وظیفہ جس نے کیا اس کو بہت فائدہ ہوا

شیخ العرب والعجم عارف بااللہ حضرت اقد س مولانا شاہ محمد حکیم اختردامت برکا تہم وفیوضم کا عنایت کیا ہوا وظیفہ ہے ۔ جو انہوں نے اپنے مواعظ میں بتایا تھا۔ جس نے کیا اس کو بہت فائدہ ہوا، ہر مسلمان کو کھلی اجازت ہے۔ اور اگر شرائط پر عمل کریں تو تاثیر بیان سے باہر ہے۔ عمل کرتے وقت پہلے دن حضرت صاحب شاہ محمد حکیم اختر کے لیے دعا بھی فرمادیں۔

اور ان کے وسیلے دے دعا کریں انشاءاللہ ! عمل میں کامیابی حاصل ہوگی۔ وہ عمل کیا ہے ” یا ناصر، یا عزیز، یامغنی ، یا صمد” ہے ۔ یہ چارنام آپ نے ایک سوگیارہ مرتبہ اکٹھے پڑھنا ہے۔ یا آ پ کا جنتا دل کرے اتنا پڑھیں۔ اول وآخر درود ابراہیمی تین مرتبہ یا سات مرتبہ پڑھیں۔ اب اس عمل کا فائدہ کیا ہوگا؟ دین اور دنیا میں ترقی ہو گی۔ اولیاء کرام کا قرب ملے گا۔ عبادت میں دل لگے گا۔ دشم نوں پر غلبہ رہےگا۔ رزق کے اسباب پیدا ہوں گے۔ قرض سے جلد چھٹکار ا ملے گا۔ بیٹیوں کے رشتے ملنے کے اسباب پیدا ہوں گے۔ یہ عمل ہے تو مختصرلیکن آپ کو اس عمل سے آ پ کو عجیب وغریب فوائد حاصل ہوں گے۔

اب تو رمضا ن کا مہینہ بھی چل رہا ہے۔ ہم لوگ سحری میں آسانی سے اٹھتے ہیں۔ تہجد کا بھی وقت ہوتا ہے۔ تہجد کا موقع مل جاتا ہے تو کیوں نہ دو رکعات نفل پڑھ کر اور ساتھ میں یہ عمل کریں۔ اور رب کے حضور دعاگوہوجائیں۔ انشاءاللہ !آپ کو ویسے بھی آپ کو معلوم ہے کہ تہجد کے وقت دعا قبول ہوتی ہے۔ تو آپ اس عمل کی برکت سے رمضان المبارک میں فائدہ اٹھا لیں۔ انشاءاللہ ! جو فوائد اور مقاصد اور جو حاجات اور جو پریشانیاں آپ کے سامنے ذکر کیے ہیں۔ یہ یہ مسائل تو حل ہوں گے ۔ اور ساتھ میں جس مقصد کے لیے دعا مانگیں گے وہ مسئلہ بھی اللہ کے فضل وکر م سے پور ا ہوجائےگا۔ امید کرتے ہیں کہ آپ اس عمل سے ضرور با ضرور بھر پور فائدہ اٹھائیں گے ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *